نئی دہلی:وزیراعظم نریندر مودی نے لوک سبھا میں اپوزیشن کے لیڈر ملک ارجن کھڑگے کو بشیر بدر کے شعر کا جواب اسی کے دوسرے شعر سے دیا ۔سات فروری کو پی ایم مودی نےلوک سبھا میں قریب ایک گھنٹے کا خطاب کیا ۔اس سے ایک دن قبل کانگریس لیڈر کھڑگے نے مودی سرکار پر حملہ کرتے ہوئے کہا تھا کہ

دشمنی کھل کر کرو،لیکن یہ گنجائش رہے

جب کبھی ہم دوست بن جائیں،تو شرمندہ نہ ہوں

یہ شعر بشیر بدر کا ہےجس کے سہارے کانگریس لیڈر نے مودی سرکار پر حملہ کرنے کی کوشش کی تھی ۔البتہ اس حملے کے ایک دن بعد سات فروری کو پی ایم مودی خود لوک سبھا میں آئے اور شعر کا جواب شعر سے ہی دیا اور کمال کی بات یہ ہے کہ بشیر بدر کے شعر کا جواب بشیر بدر کے ہی شعر سے دیا۔ پی ایم مودی نے بشیر بدر کے اس شعر سے کانگریس کو جواب دیا کہ

جی بہت چاہتا ہے  سچ بولیں

کیا کریں ،حوصلہ نہیں ہوتا

 پی ایم مودی نےکھڑگے کو مخاطب کرکے کہا کہ آپ نے گزشتہ روز مشہور شاعر بشیر بدر کا ایک شعر سنایا تھا ،لیکن حسب ضرورت اس کے بعد کے اشعار کو آپ نے نہیں پڑھا۔     

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here