نئی دہلی:چونتیسویں آل انڈیا اہل حدیث کانفرنس کا شاندارآغاز نئی دہلی کے رام لیلا میدان میں ہوچکا ہے ۔آج صبح قریب دس بجے اس دو روزہ کانفرنس کا آغاز تلاوت کلام اللہ سے ہوا ۔اس کے بعد ملک کے مختلف ریاستوں سے آئے جمعیت اہل حدیث کے نمائندگان کے علاوہ ملک کے قابل ذی وقار شخصیات کے تاثرات کا سلسلہ شروع ہوا۔سبھوں نے جمعیت اہل حدیث کے بینر تلے کئے گئے دینی و سماجی کار ناموں کو سراہنے کے ساتھ ساتھ جمعیت اہل حدیث کے اس آل انڈیا کانفرنس کو وقت کا تقاضہ بتایا اور اس کانفرنس کے موضوع کی جم کر تعریف کی۔وہیں دوسری طرف اس تاثراتی سیشن میں دو باتیں بہت ہی مضبوطی کے ساتھ پیش کی گئیں ۔اول یہ کہ جمعیت اہل حدیث نے عالمی سطح پر دہشت گردانہ واقعات اور دہشت گردوں کے خلاف جس تیزی کے ساتھ اور مضبوطی کے ساتھ قدم اٹھایا ہے اس کی سبھوں نے تعریف کی اور کہا کہ داعش سے لیکر بوکوحرام تک اور ملکی سطح پر ہونے والے دہشت گردانہ واقعات کی مذمت کرنے والوں میں سب سے پہلا نام اگر کسی جمعیت کا رہا ہے تو اس کو جمعیت اہل حدیث ہند کہتے ہیں ۔ساتھ ہی ساتھ عوام کے اندر جمعیت اہل حدیث کے تئیں جو غلط فہمیاں پھیلائی گئی ہیں کہ داعش جیسی بدترین تنظیم کے حمایتی ہیں ،اس پر علمائے کرام نے ایک آواز میں کہا کہ دہشت گردی کے خلاف سب سے بڑا قدم ہندوستان میں اگر کسی جمعیت نے بڑھایا ہے تووہ جمعیت اہل حدیث ہے۔یہ دشمنوں کی سازش ہے کہ وہ جمعیت اہل حدیث کو بدنام کرے ،لیکن جو لوگ جمعیت اہل حدیث کے منہج ومسلک اور طریقہ کار کو جانتے ہیں وہ کبھی اس بات کو نہیں مان سکتے۔وہیں دوسری طرف جمعیت اہل حدیث کے علمائے کرام کے مابین اور نئی و قدیم جمعیت کے درمیان اتحاد کو دیکھ کر اکثر وبیشترلوگوں نے جمعیت کے اس اتحاد و اتفاق کی کافی تعریف کی ۔


دراصل جمعیت اہل حدیث ہند کے امیر مولانا اصغر علی امام مہدی سلفی اور مشہور عالم دین مولانا صلاح الدین مقبول سلفی کے مابین چار سال قبل اختلافات کی وجہ سے ایک نئی جمعیت اہل حدیث کاقیام عمل میں آیا تھا جس کی قیادت مولانا صلاح الدین مقبول کر رہے تھے۔البتہ وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ دونوں علمائے کرام کے مابین دوریاں ختم ہوئیں اور مولانا شیرخان جمیل کی مدد سے دونوں علمائے کرام کے مابین اتحاد پیداہوا اور پھر نئی جمعیت کے خاتمے کا اعلان کرتے ہوئے پوری طرح قدیم جمعیت اہل حدیث ہند میں مولانا صلاح الدین مقبول سلفی لوٹ آئے۔اس عمل کو تمام لوگوں نے کافی سراہا اور ایک بڑی کامیابی بتایا۔
دوروزہ کانفرنس کے پہلے دن کے استقبالیہ تقریب میں ملک و بیرون ملک سے آئے علمائے کرام و دیگر نمائندگان نے اپنااپنا تاثراتی خطاب پیش کیا۔دوران خطاب مولانا صلاح الدین مقبول نے جمعیت اہل حدیث ہند کے اس کانفرنس کی جم کر تعریف کی اور ذمہ داران جمعیت کو مبارکباد پیش کی۔وہیں برطانیہ سے آئے مولانا شیر خان جمیل نے بھی جمعیت اہل حدیث کے کارناموں کو شمار کرتے ہوئے دہشت گردی کے خلاف جمعیت کی کوششوں کو لوگوں کے سامنے پیش کیا اور عالمی سطح پر جاری دہشت گردانہ واقعات کی اصلیت سے عوام کو روبرو کرانے کی کوشش کی ۔پروگرام کی صدارت امیر جمعیت اہل حدیث ہند مولانا اصغر علی امام مہدی نے کی ۔انہوں نے کہا کہ اسلام کی بنیادی تعلیم ہی سلامتی اور امن وسکون ہے ۔اسلام کسی بھی قسم کی دہشت گردی کی ذرہ برابر بھی حمایت نہیں کرتا بلکہ سب سے زیادہ دہشت گردی کے خلاف سختی کے ساتھ جو پیش آتا ہے وہ مذہب اسلام ہے۔موصوف نے کانفرنس کے موضوع کے انتخاب کی حکمت اور اس کی اہمیت و افادیت کی بھی وضاحت کی۔ساتھ ہی ساتھ انہوں نے جمعیت اہل حدیث کے بنیادی مقاصد کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ آپسی بھائی چارہ،عالمی امن وسکون اور آپسی محبت واخوت کا فروغ ہماری اس جمعیت کا مقصد ہے۔ انہوں نے خصوصی طور پر اپنی ملت کے جوانوں کو خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آپ کہیں بھی کسی کے بہکاوے میں نہ آئیں ۔امن وسکون کے پیغام کو عام کرنے کا کام کریں ۔آپ کے خلاف دشمن سرگرم ہیں ،آپ کے خلاف سازشیں رچی جارہی ہیں،اس لئے آپ کو کافی محتاط رہنے کی ضرورت ہے۔صدارتی خطبے کے بعد وہیں رام لیلا میدان میں مفتی وشیخ حرم مسجد نبوی شریف شیخ ابراہیم بن ابراہیم الترکی نے جمعہ کا خطبہ پیش کیا اور مفتی و شیخ حرم کی امامت میں نماز جمعہ ادا کی گئی ۔پہلے سیشن کے نظامت کی ذمہ داری جمعیت اہل حدیث ہند کے ناظم عمومی مولانا ہارون سنابلی نے نبھائی ۔یاد رہے کہ دوسرے سیشن کا آغاز شام چاربجے سے شروع ہوکر رات کے دس بجے تک چلے گا۔

خطبہ جمعہ پیش کرتے ہوئے شیخ ابراہیم
جمعہ کی نماز ادا کرتے لوگ

Facebook Comments

19 COMMENTS

  1. This design is steller! You most certainly know how to keep a reader amused. Between your wit and your videos, I was almost moved to start my own blog (well, almost…HaHa!) Excellent job. I really loved what you had to say, and more than that, how you presented it. Too cool!

  2. The other day, while I was at work, my sister stole my iphone and tested to see if it can survive a 40 foot drop, just so she can be a youtube sensation. My iPad is now broken and she has 83 views. I know this is completely off topic but I had to share it with someone!

  3. I absolutely love your blog and find many of your post’s to be exactly what I’m looking for. Does one offer guest writers to write content for you personally? I wouldn’t mind producing a post or elaborating on a few of the subjects you write related to here. Again, awesome site!

  4. Hi, Neat post. There’s a problem together with your website in internet explorer, may test this… IE still is the market chief and a good component to other people will miss your wonderful writing because of this problem.

  5. This design is steller! You obviously know how to keep a reader entertained. Between your wit and your videos, I was almost moved to start my own blog (well, almost…HaHa!) Great job. I really loved what you had to say, and more than that, how you presented it. Too cool!

  6. Hello outstanding blog! Does running a blog such as this require a large amount of work? I’ve very little knowledge of coding but I was hoping to start my own blog soon. Anyway, if you have any recommendations or tips for new blog owners please share. I understand this is off topic nevertheless I just needed to ask. Thank you!

  7. Yesterday, while I was at work, my sister stole my iphone and tested to see if it can survive a thirty foot drop, just so she can be a youtube sensation. My apple ipad is now destroyed and she has 83 views. I know this is entirely off topic but I had to share it with someone!

  8. Do you mind if I quote a few of your articles as long as I provide credit and sources back to your blog? My website is in the very same niche as yours and my users would really benefit from some of the information you present here. Please let me know if this okay with you. Many thanks!

  9. I am really loving the theme/design of your site. Do you ever run into any internet browser compatibility issues? A couple of my blog visitors have complained about my site not working correctly in Explorer but looks great in Firefox. Do you have any recommendations to help fix this problem?

  10. Its like you read my mind! You seem to know a lot about this, like you wrote the book in it or something. I think that you could do with a few pics to drive the message home a little bit, but instead of that, this is great blog. An excellent read. I’ll certainly be back.

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here