سلاخوں کے پیچھے آج کی رات گزاریں گے ٹائیگر سلمان

0

جودھپور:کالا ہرن کیس میں آخر کار آج فیصلہ آہی گیا ہے اور جودھپور کی نچلی عدالت نے کالا ہرن مارنے کے معاملے میں ہندی سنیما کے اسٹار سلمان خان کو مجرم مانتے ہوئے پانچ سال جیل اور دس ہزار روپئے جرمانہ کی سزاسنائی ہے۔حیرت کی بات یہ ہے کہ بقیہ چار ملزم سیف علی خان ،تبو،سونالی بندرااور نیلم کو شکوک و شبہات کی بنیاد پر بری کردیا گیا ۔جودھپور کی چیف جوڈیشیل مجسٹریٹ کی عدالت کے اس فیصلے کے بعد سلمان خان کی ضمانت کیلئے سلمان کے وکیل نے فوراً سیشن کورٹ میں عرضی دائر کی جس کو عدالت نے یہ کہتے ہوئے خارج کردیا کہ اس پر کل ساڑھے دس بجے سماعت ہوگی ۔اس کا مطلب یہ ہوا کہ سلمان خان کو آج کی رات جودھپور کے سینٹرل جیل میں ہی گزارنے پڑیں گے۔

یاد رہے کہ یہ معاملہ سن 1998کا ہے جب سلمان خان جودھپور میں سیف علی خان اور تبو وغیرہ کے ساتھ اپنی فلم ”ہم ساتھ ساتھ ہیں “کی شوٹنگ کر رہے تھے ،تبھی انہوں نے دو چنکاڑا اور تین کالے ہرن کا شکار کیا تھا۔ساتھ دینے والے بقیہ ساتھیوں کو عدالت نے بری قرار دیا ہے جبکہ سلمان خان کو مجرم مانتے ہوئے پانچ سال جیل کی سزا سنائی ہے۔کہا یہ بھی جارہا ہے کہ عدالت میں سلمان خان کو جیسے ہی سزا سنائی گئی سلمان خان کی دونوں بہنیں ”الویرا اور ارپیتا“ایک دوسرے سے مل کر رونے لگیں۔سلمان نے ان کو کنٹرول کرنے کی کوشش کی اور سب کچھ ٹھیک کرکے خود جیل انتظامیہ کے ساتھ میڈیکل کیلئے سیدھے اسپتال چلے گئے ۔وہاں سے میڈیکل کے بعد سلمان خان کو جودھپور کے سینٹرل جیل میں بند کردیا گیا۔اب دیکھنے والی بات یہ ہے کہ کل جب سماعت ہوگی تو عدالت سلمان خان کی ضمانت منظور کرتی ہے یا نہیں۔

یاد رہے کہ جودھپور کے کانکاوانی گاﺅں سے متعلق یہ کیس ہے جہاں وشنوئی سماج کے لوگوں کی اکثریت ہے۔یہی کارن ہے کہ سلمان کے خلاف جیسے ہی فیصلہ سنایا گیا وشنوئی سماج کے لوگ خوشیوں میں پٹاخے پھوڑنے لگے اور جشن منانے لگے۔

You might also like More from author

Leave A Reply

Your email address will not be published.