ممبئی:آج کل مشہور فلم اداکار ناناپاٹیکر اور تنوشری دتہ کے مابین تنازعہ میڈیا میں کافی سرخیاں بٹور رہا ہے۔سب سے دلچسپ بات یہ ہے کہ اس معاملے پر بالی ووڈ دو حصوں میں تقسیم ہوگیا ہے۔کچھ لوگ تنوشری دتہ کی حمایت میں آواز اٹھارہے ہیں وہیں کچھ لوگ نانا پاٹیکر کے حق میں اپنی بات رکھ رہے ہیں۔اس معاملے پر اب تک پرینکا چوپڑا،سونم کپور،ٹوینکل کھنہ،سوارا بھاشکر یہ سب ایسے نام ہیں جنہوں نے تنوشری دتہ کی حمایت کی ہے وہیں دوسری طرف کوریوگرافر گنیش اچاریہ اور راکیش سارنگ نے نانا پاٹیکر کی طرف سے صفائی دی ہے۔اس کے علاوہ سلمان خان ،عامر خان اور امیتابھ بچن نے اس مسئلے پر بات کرنے سے انکار کردیا ہے۔اب اس معاملے پر ایک اور بڑا نام آگیا ہے۔یعنی اپنی بے باکی کیلئے مشہور اداکارہ کنگنا رنوت نے بھی اس مسئلے پر کھل کر بات کی ہے۔

کنگنا رنوت نے کہا کہ میں کسی کی طرف داری نہیں کروں گی۔لیکن معاشرے میں مردوں کو یہ بتایا جانا چاہیے کہ خواتین کے ساتھ کیسا برتاو کیا جاتا ہے۔کنگنا نے کہا کہ شہزادے بیٹاوٗں کو یہ بتایا جانا چاہیے کہ ’’نہ کا مطلب کیا ہوتا ہے‘‘۔میں اس مسئلہ پر کوئی بھی فیصلہ نہیں دے سکتی۔کنگنا نے تنوشری کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ ہندوستان کے مرد اپنی ماوٗں کے راجا بیٹے کے جیسے بڑے ہوتے ہیں۔لیکن ان میں بنیادی اخلاق کی کمی ہوتی ہے۔کنگنا نے مزید کہا کہ انہیں لگتا ہے کہ سماج کی بھلائی کیلئے ان راجا بیٹوں کو یہ بات بتائی جانی چاہیے جو ان کو ان کے والدین نہیں سمجھا پاتے۔

Facebook Comments