رائے پور:
بوڑھی ہوئی ماں،جھک گئی کمر،اب تو لوٹ آ
کرنا نہ دیر،سانسیں چند باقی ہیںاب تو لوٹ آ
پتھرا گئی آنکھیں،اک نظر دیکھنے کو اب تو لوٹ آو۔
یہ کسی شاعرکا کلام نہیں ہے بلکہ یہ ایک ماں کا پیغام ہے اپنے اکلوتے بیٹے کے نام جس کے انتظار میں ماں کی کمر جھک چکی ہے۔زندگی کے آخری حصے میں پہنچ چکی ہے اور جو اپنی سانس بند ہونے سے پہلے اپنے نور نظر کو ایک بار دیکھنا چاہتی ہے۔اس ضعیف ماں کا بیٹا آج سے قریب سترہ سال پہلے اپنے ہاتھوں میں بندوق اٹھا کر نکسلیوں کی دنیا میں گم ہوگیا تھا اور آج تک اپنے گھر لوٹ کر نہیں آیاہے۔ماںہر روز صبح اس امید میں آنکھیں کھولتی ہیں کہ کہیں آج اپنے سہارے کا دیدار ہوجائے گا ۔اور اسی انتظار میں شام ہوجاتی ہے اور آنکھیں تھک پر پلک بند کر لیتی ہیں پھر بھی یہ سوچتی رہتی ہیں کہ کوئی نیند سے اس خوشخبری کیلئے بیدار کرے گا کہ اس کا بیٹا گھر لوٹ آیا ہے۔لیکن سترہ سالوں سے ماں کا یہ خواب ابھی تک پورا نہیں ہوسکا ہے۔
زندگی کے آخری دم تک اپنے لخت جگر کو ایک نظر دیکھنے کی بے پناہ چاہ میں ایک ماں کا خط ان دنوں چھتیس گڑھ کے سرحد پر گڈھچیرولی(مہاراشٹر)اور آس پاس کے علاقوں میں جگہ جگہ پوسٹر کی صورت میں چسپاں ہے۔بزرگ والدین کو پوری امید ہے کہ کوئی ان کا یہ پیغام ان کے بیٹے تک پہنچا دے گا ۔پولس انتظامیہ سے بھی انہوں نے مدد کی امید لگائی ہے۔سنگین طور پر بیمار ماں کے کانپتے ہونٹوں سے بس ایک ہی جملہ بار بار نکل رہا ہے کہ میرا نیرو ضرور آئے گا۔
اپنے اکلوتے بیٹے کو جیتے جی اپنے سے دور زیادہ دنوں تک کون برداشت کرسکتا ہے لیکن گزشتہ سترہ سالوںسے اپنے بیٹے کی دوری کا غم برادشت کرنے والے اس والدین کا درد واقعتادل کے آنسو ںرلادینے والا ہے۔
اوڈیسہ کے رائے گڑھ ضلع کے کلیان سنگھ پور بلاک میں رہنے والے نرہر راوت کا پچھلے چار فروری کو اوڈیہ زبان میں لکھا ہوا نظم کی صورت میںایک خط چھتیس گڑھ کے سرحدی علاقوں میں متعدد مقامات پر چسپاں پایا گیا ،جس خط میں بوڑھے ماں باپ نے اپنے بیٹے نیرو سے گھر لوٹ آنے کی دردمندانہ اپیل کی ہے۔

خط کا اردو ترجمہ

میرے نیرو….
دور سے ہی سہی….
میرا اور اپنی ماں کا آشرواد لینا….
بھگوان جگن ناتھ کی مہربانی سے تو جہاں بھی ہو، اچھے سے ہو…..
یہی ہماری امید ہے…..
پچھلے سترہ سالوں سے تمہارے واپس آنے کی راہ دیکھ رہے ہیں۔اب بھی ہمیں امید ہے کہ تو ہمارے پاس محفوظ واپس لوٹ آئے گا۔سبھی والدین کی خواہش ہوتی ہے کہ بڑھاپے میں اس کا بیٹا اس کے ساتھ میں ہو۔یہی خواہش ہم دونوں میاں بیوی کی بھی ہے۔مجھے وہ دن کل جیسا ہی لگ رہا جب تم نے اپنی ماں کا اسپتال میں علاج کروایا تھا۔تمہارے جانے کے بعد سے ہماری حالت کافی خراب ہوگئی ہے۔تمہیں یاد کر رو رو کر ہمارا برا حال ہے۔
اسی وجہ سے تمہاری ماں نے بستر پکڑ لیا ہے۔ہمارا پورا گھر ٹوٹ گیا ہے۔پیسے ختم ہوگئے ہیں۔جھونپڑی میں رہنے کو مجبور ہیں ۔اگر تو جھونپڑی دیکھے گا تو آنکھوں میں آنسو ں آجائیں گے۔ہمیں امید ہے کہ تو وہ راستہ چھوڑ کر ہمارے پاس واپس آجائے گا۔ہم تمہارے آنے کی راہ دیکھ رہے ہیں۔توہی اپنی ماں کی آنکھوں سے بہتے آنسوں پونچھ پائے گا۔ہمارا ٹوٹا گھر بھی بنا پائے گا۔ہماری امید پر پانی مت پھیرنا….
تمہارے پریشان حال اور تکلیف کی مار جھیل رہے والدین
نرہری راوت اور سرسوتی راوت

کون ہے نیرو؟
جگدل پور و اوڈیسہ میں کافی وقت تک سماجی خدمات انجام دے چکے بھارت بھوشن کا کہنا ہے کہ نیرو کے بارے میں پہلے ملک نگری اور اسکے بعد سکمہ وگڑھ چیرولی علاقے میں ”تبدیلی“نام سے ایک نکسلی تنظیم ہے جہاں اس کے کام کرنے کی خبر ہے۔پولس کی لسٹ میں وہ wantedہے ،گزشتہ تین سالوں سے اس کی کوئی خبر نہیں۔

Facebook Comments

21 COMMENTS

  1. Do you have a spam problem on this site; I also am a blogger, and I was curious about your situation; we have created some nice practices and we are looking to trade techniques with others, why not shoot me an e-mail if interested.

  2. I was curious if you ever thought of changing the structure of your site? Its very well written; I love what youve got to say. But maybe you could a little more in the way of content so people could connect with it better. Youve got an awful lot of text for only having 1 or 2 pictures. Maybe you could space it out better?

  3. This design is steller! You certainly know how to keep a reader entertained. Between your wit and your videos, I was almost moved to start my own blog (well, almost…HaHa!) Excellent job. I really enjoyed what you had to say, and more than that, how you presented it. Too cool!

  4. Wonderful blog you have here but I was curious about if you knew of any discussion boards that cover the same topics discussed in this article? I’d really love to be a part of online community where I can get comments from other knowledgeable individuals that share the same interest. If you have any suggestions, please let me know. Appreciate it!

  5. Greetings from Ohio! I’m bored at work so I decided to browse your site on my iphone during lunch break. I love the knowledge you present here and can’t wait to take a look when I get home. I’m amazed at how fast your blog loaded on my cell phone .. I’m not even using WIFI, just 3G .. Anyhow, amazing blog!

  6. Now you can buy free viagra and custom printed adult tapes online. We are the UK’s leading adult toy manufacturer. UKPRINTEDTAPE.CO.UK adult chat and dating .

  7. I was wondering if you ever thought of changing the page layout of your blog? Its very well written; I love what youve got to say. But maybe you could a little more in the way of content so people could connect with it better. Youve got an awful lot of text for only having 1 or two pictures. Maybe you could space it out better?

  8. Hello there, you’re certainly correct. I frequently read through your articles closely. I am also fascinated by aadhar card update status, you might discuss this occasionally. I’ll be back soon.

  9. Today, while I was at work, my sister stole my iphone and tested to see if it can survive a 30 foot drop, just so she can be a youtube sensation. My iPad is now destroyed and she has 83 views. I know this is totally off topic but I had to share it with someone!

  10. Please let me know if you’re looking for a article author for your site. You have some really great articles and I believe I would be a good asset. If you ever want to take some of the load off, I’d really like to write some articles for your blog in exchange for a link back to mine. Please blast me an email if interested. Many thanks!

  11. Usually I don’t read post on blogs, but I would like to say that this write-up very pressured me to check out and do it! Your writing taste has been surprised me. Thank you, very nice article.

  12. Hey I know this is off topic but I was wondering if you knew of any widgets I could add to my blog that automatically tweet my newest twitter updates. I’ve been looking for a plug-in like this for quite some time and was hoping maybe you would have some experience with something like this. Please let me know if you run into anything. I truly enjoy reading your blog and I look forward to your new updates.

  13. When I initially commented I clicked the “Notify me when new comments are added” checkbox and now each time a comment is added I get four e-mails with the same comment. Is there any way you can remove people from that service? Thanks!

  14. *I simply must tell you that you have written an excellent and unique article that I really enjoyed reading. I’m fascinated by how well you laid out your material and presented your views. Thank you.

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here