نئی دہلی:نیشنل ٹی وی چینل نیوز ۱۸ کے ہندی  پروگرام آر پار میں پرورگرام کے اینکر امیش دیوگن نے گزشتہ روز خواجہ معین الدین چشتیؒ کی شان میں دوران پروگرام گستاخی کرتے ہوئے انہیں لٹیرا تک کہہ دیا ۔امیش دیوگن نے گندی زبان سے خواجہ معین الدین چشتی کی شان میں نازیبہ لفظ کا استعمال کیا اور اب نتیجہ یہ دیکھنے کو مل رہا ہے کہ در در معافی کی بھیک مانگ رہا ہے۔وجہ ہے کہ امیش دیوگن کے خلاف ملک کی مختلف ریاستوں میں متعدد ایف آئی آر درج کیا جاچکا ہے اور یہ سلسلہ مزید تیز ہوتا دکھائی دے رہا ہے ،اس بیچ نیٹ ورک ۱۸ کے مالک مکیش امبانی پر بھی یہ دباو ڈالا جارہا ہے کہ امیش دیوگن کو اپنے چینل سے فارغ کرے۔اس بیچ ایک نئی مہم شروع ہوگئی ہے جس کے ذریعے مکیش امبانی پر دباو بنانے کی کوشش کی جارہی ہے۔دراصل جیو نیٹ ورک کا سم کارڈ استعمال کرنے والے بیشتر مسلم صارفین نے اپنے موبائل نمبر کو جیو سے پورٹ کرانا شروع کردیا ہے۔جیو کا نیٹ ورک چھوڑ کر احتجاج کے طور پر دوسری کمپنی جیسے ایئرٹیل ،آئیڈیا وغیرہ کی سروس لے رہے ہیں ۔اس بیچ اس مہم کو کافی رفتار ملتی نظر آرہی ہے وہیں دوسری جانب مختلف مقامات پر امیش دیوگن اور نیٹ ورک ۱۸ کے خلاف  احتجاج ومظاہرہ بھی کیا جارہا ہے۔وہیں دوسری طرف امیش دیوگن نے اپنے غلطی کو قبول کرتے ہوئے اب تمام مسلم برادری اور خواجہ معین الدین چشتیؒ کے چاہنے والوں سے معافی مانگی ہے ،امیش نے ایک ویڈیو جاری کراپنی غلطی پر شرمندگی کا اظہار کیا ہے اور معافی بھی مانگی ہے۔لیکن دوسری جانب جیو نیٹ ورک کو بڑا نقصان ہوتا دکھائی دے رہا ہے چونکہ جیو سِم کارڈ استعمال کرنے والوں کی ہزاروں صارفین نے اپنا نمبر پورٹ کرانا شروع کردیا ہے اور ،اور یہ سلسلہ اس وقت تک جاری رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے جب تک امیش دیوگن کو نیٹ ورک۱۸ سےنکالا نہیں جاتا ۔

 

دو لفظ آپ کی طرف سے بھی

Posted by Rahmat Kalim on Wednesday, June 17, 2020

Facebook Comments