دو دن قبل ہوا تھا ممبری کا اعلان،وزیر اقلیتی امور مختار عباس نقوی اور کمیشن کے چیئر مین غیور الحسن رضوی نے دی مبارکباد


نئی دہلی ،14جنوری:قومی اقلیتی کمیشن کا ممبر نامزد کئے جانے کے بعد آج عاطف رشید نے آفس پہونچ کر اپنی ذمہ داری سنبھال لی۔ عاطف رشیدجیسے ہی این سی ایم پہونچے تو آفس عہدیداران کی جانب سے ان کا خیر مقدم کیا گیااور مٹھائی کھلاکر انھیں مبارکباد پیش کی گئی ۔کمیشن کے چیئر مین غیور الحسن رضوی سے عاطف رشید نے خصوصی ملاقات کی اور کمیشن میںزیر التوا معاملات پر تبادلہ خیال کیا ۔اس دوران غیور الحسن رضوی نے انھیں مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ عاطف رشید کافی وقت سے اقلیتوں کے معاملات دیکھتے آرہے ہیں اور ان کے پاس اقلیتوں کے مسائل کا کافی تجربہ ہے امید ہے کمیشن میں ان کے آنے سے جہاں اقلیتوں کو فائدہ ہوگا وہیں کمیشن بھی ان کے تجربات سے بھر پور فائدہ اٹھانے کی کوشش کرے گا۔اس سے قبل نو منتخب ممبر نے وزیر اقلتی امور مختار عباس نقوی سے بھی ملاقات کی اور کمیشن کے معاملات اور اقلیتوں کے مسائل پر وزیر موصوف سے خصوصی تبادلہ خیال کیا۔

مختار عباس نقوی نے عاطف رشید کو کمیشن کا ممبر نامزد کئے جانے پر مبارکباد پیش کی اور منہ میٹھا کراکر ان کا استقبال کیاجبکہ نو منتخب ممبر نے بھی وزیر موصوف کو شال پہناکر خصوصی شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ وہ کمیشن میں اپنا کام پوری ایمانداری اور ذمہ داری سے کریں گے اور اقلیتوں کے مسائل کو حل کرانے میں اپنا ہر ممکن تعاون پیش کریں گے اور حکومت نے ان پر جو اعتماد ظاہر کیا ہے اس پر وہ کھرا اترنے کی کوشش کریں گے۔غور طلب ہے کہ قومی اقلیتی کمیشن حکومت ہند کی وزارت اقلیتی امور کے تحت کام کرنے والا ایک آئنی ادارہ ہے جس میں کمیشن کے چیئر مین کے علاوہ اقلیتی طبقات کی نمائندگی کے لئے ہر اقلیتی طبقہ کا ایک فرد بطور نمائندہ ممبر ہوتا ہے ۔نمائندہ سے بات کرتے ہوئے عاطف رشید نے کہا کہ انھیں بہت خوشی ہورہی ہے کہ حکومت نے انھیں اتنی اہم ذمہ داری کے لئے منتخب کیا وہ اس کے لئے خاص طور پر وزیر اعظم نریندر مودی کے شکر گزار ہیں ۔انہوںنے آگے کہا کہ بی جے پی پارٹی میں بھی انہوں نے اقلیتی معاملات کا کام دیکھا ہے اور اقلیتوں کے مسائل کا انھیں خصوصی تجربہ ہے جس کا فائدہ انھیں کمیشن کی ذمہ داری ادا کرنے میں ملے گااور وہ پوری دیانتداری اور محنت کے ساتھ اپنی اس ذمہ داری کو ادا کرنے کی کوشش کریں گے۔

Facebook Comments