نئی دہلی:بی جے پی صدر امت شاہ کے بعد مغربی بنگال پہنچے پی ایم نریندر مودی نے ریاست کی ممتا بنرجی کی سرکار پر جم کر حملہ کیا ۔لوگوں کا جم غفیر دیکھ کر بے انتہا خوش پی ایم مودی نے کہا کہ آج کی ریلی میں عوام کی کثرت یہ بتاتی ہے کہ ممتا سرکار بنگال میں تشدد پر کیوں اتر آئی ہے،انہوں نے کہا کہ میرے حوالے سے بنگال کی عوام میں جو پیار ہے اس سے ممتا بنرجی کی سرکار کافی ڈری ہوئی ہے،اور اس ڈر کو ختم کرنے کیلئے وہ لوگوں کا قتل کروا رہی ہیں،پی ایم مودی کی ریلی میں بھیڑ اتنی زیادہ تھی کہ بھگدڑ جیسی صورتحال پیدا ہوتی نظر آرہی تھی ،لوگ ایک دوسرے سے دھکا مکی کرنے لگے تھے،اس کو دیکھتے ہوئے پی ایم مودی نے صرف پندرہ منٹ میں ہی اپنا خطاب ختم کردیا ،چونکہ پی ایم مودی کے لاکھ سمجھانے کے بعد بھی لوگ ایک دوسرے سے دھکا مکی کر ہی رہے تھے،

ٹھاکر نگر کے عوامی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے پی ایم مودی نے کہا کہ یہ ملک کی بد قسمتی رہی ہے کہ آزادی کے بعد بھی کئی دہائیوں تک گاوں کی صورتحال پر سرکار نے دھیان نہیں دیا ،اور گاوں کے ساتھ جتنی ایمانداری دکھانی چاہیے تھی ،سرکار نے نہیں دکھائی ،اور یہاں مغربی بنگال میں صورتحال مزید خراب ہے،،ہماری سرکار حالات بدلنے کی کوشش کر رہی ہے،یہاں کی سرکار نے کبھی بھی گاوں کی طرف دھیان نہیں دیا،جو گزر گیا وہ گزر گیا،اب نیا بھارت اب اس حالت میں نہیں رہ سکتا،ساڑھے چار سالوں سے مرکز کی سرکار بنگال کے گاوں کی صورتحال بدلنے کی کوشش کر رہی ہے،اور کل تاریخی بجٹ میں پہلی بار کسانوں اور مزدوروں کیلئے بہت بڑی اسکیموں کا اعلان کیا گیا ہے،بجٹ میں جن اسکیموں کا اعلان کیا گیا ہے ان سے ملک کے بارہ کروڑ سے زائد چھوٹے کسان پریوار کو ۳۰،۴۰ کروڑ مزدوروں اور تین کروڑ سے زیادہ متوسط طبقہ کے پریوار کو سیدھا فائدہ پہنچے گا۔

Facebook Comments