نئی دہلی:قومی راجدھانی دہلی میں اس سال کے اخیر یا آئندہ سال کے آٖغاز میں اسمبلی انتخاب کا امکان ہے،ایسے میں  بی جے پی ،کانگریس،عام آدمی پارٹی اپنے اپنے طور پر کوششیں شروع کردی ہیں ۔لیکن اس بیچ سب سے بڑی خبر یہ ہے کہ دہلی کو لیکربی جے پی اور جدیو میں تکرار ہوگیا ہے جس کی وجہ سے نتیش کمار کی پارٹی تیر کے نشان کے ساتھ دہلی کی تمام سیٹوں پر اپنا امیدوار اتارے گی۔اس فیصلے کو سی ایم نتیش کمار نے منظوری دے دی ہے جس کے بعد دہلی میں جدیو کی ٹیم پوری طرح سے متحرک ہوگئی ہے۔

جدیو کے ریاستی ترجمان ستیہ پرکاش مشرا نے بتایا کہ حال ہی میں ریاست دہلی میں پارٹی کا صدر دیانند رائے کو منتخب کیا گیا ہے۔اور ان کی نگرانی میں پارٹی اسمبلی انتخابات کی تیاری میں مصروف ہوگئی ہے۔آپ کو بتادیں کہ دہلی میں پروانچل کے لوگوں کی تعداد زیادہ ہے اس کو نظر میں رکھتے ہوئے پارٹی نے دہلی میں بی جے پی کے خلاف میدان میں اترنے کا فیصلہ کیا ہے۔پارٹی ترجمان کا کہنا ہے کہ جدیو کو دیگر ریاستوں میں فروغ دینے اور مضبوط کرنے کی حمکت عملی کے پیش نظر جدیو نے ایسا فیصلہ ہے۔

 

Facebook Comments