نئی دہلی:ملک کی مشہور ومعروف جواہر لعل نہرو یونیورسٹی میں قریب ایک سمسٹر سے تعلیمی نظام ٹھپ ہے۔جے این یو طلبا نے فیس میں اضافے کے خلاف مسلسل کیمپس کے اندر اور کیمپس کے باہر بھی احتجاج ومظاہرہ کیا لیکن اس کے باوجود اب تک طلبا کے تمام مطالبات پورے نہیں ہوئے ہیں ،یہی وجہ ہے کہ جے این یو کے طلبا نے حالیہ سمسٹر کا پوری طرح سے بائیکاٹ کیا ہے،جے این یو انتظامیہ نے امتحانات کرانے کی لاکھ کوششیں کی،طلبا کیلئے امتحانات میں طرح طرح کی سہولیات کا اعلان بھی کیا لیکن ان تمام مراعات کے باجود جے این یو طلبا نے اپنے احتجاج اور بائیکاٹ کا سلسلہ جاری رکھا،لیکن اب جو خبر مل پارہی ہے اس کے مطابق ایک بار پھر سے جے این یو میں تعلیمی نظام کی بحالی کی امید نظر آرہی ہے۔
دراصل جواہر لعل نہرو یونیورسٹی ٹیچر ایسوسی ایشن نے فیصلہ کیا ہے کہ سرمائی سمسٹر کیلئے ۲۰ جنوری سے باضابطہ سمسٹر کا امتحان ہوگا اور اس کی تیاری کیلئے چھ جنوری سے ۱۷ جنوری تک کلاسز کرائے جائیں گے،وہیں سمسٹر کے دوران سنیچر کو اضافی کلاسز بھی کرائے جانے کی خبر ہے۔ایسے میں اگر یہ سب کچھ ہوجاتا ہے تو ممکن یے جے این یو میں تعلیمی نظام ایک بار پھر سے بحال ہوسکتا ہے۔

 

Facebook Comments