نئی دہلی:ایف اے ٹی ایف سے آخری موقع ملنے کے بعد بھی پڑوسی ملک پاکستان ناپاک حرکتوں سے باز نہیں آرہا ہے۔دہشت گردی کا کھیل کھیلنے اور جموں کشمیر کے سہارے ہندوستان میں دہشت گردانہ واقعات کو انجام دینے کی مسلسل کوشش کررہا ہے۔ادھر دفاعی فورسز کو ملی خفیہ جانکاریوں کے مطابق قریب ۲۵۰ سے زیادہ دہشت گرد پاک مقبوضہ کشمیر میں لنچ پیڈ کے اندر ایل او سی کے پاس ہندوستان میں داخل ہونے کے فراق میں ہے۔ان تمام دہشت گردوں کا مقصد پہلے جموں کشمیر میں دہشت گردانہ واقعات کو انجام دینا بتایا جارہا ہے۔

یہ تمام دہشت گرد اس فراق میں ہیں کہ پاکستانی آرمی کے سہارے کب انہیں ہندوستان میں داخل ہونے کا موقع ملے،وہ سرحد کے آس پاس واقع لنچ پیڈ میں موجود ہیں اور موقع کی تلاش میں ہیں تاکہ وہ سرحد پار کرکے جموں کشمیر میں خونی کھیل کھیل سکے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ دہشت گردوں کو جو لوکیشن معلوم ہوا ہے ٹھیک اسی کے پاس پاکستانی آرمی  کمانڈو کا بھی لوکیشن مل رہا ہے ،ایسے میں مانا جارہا ہے کہ یہ تمام دہشت گرد پاکستانی آرمی کی مدد سے ہندوستان میں داخل ہونا چاہ رہے ہیں ۔یہی وجہ ہے کہ پاکستان کی طرف سے مسلسل سیزفائر کی خلاف ورزی کی جارہی ہے تاکہ اس درمیان ان دہشت گردوں کو جموں کشمیر میں داخل ہونے کا موقع مل جائے ۔ادھر انڈین فورس اپنے طورپر تمام احتیاطی اقدامات کرچکی ہے

Facebook Comments