نئی دہلی:دہلی کی تیس ہزاری کورٹ میں اس وقت افراتفری کا ماحول پیدا ہوگیا جب وکیل اور پولیس کے درمیان مارپیٹ شروع ہوگئی۔خبر ہے کہ پارکنگ کو لیکر تیس ہزار کورٹ کے وکیل سے پولیس نے بحث کی جس کے بعد دونوں کے مابین تکرار ہوا اور معاملہ یہاں تک پہنچا کہ کئی وکیل ایک ساتھ جمع ہوگئے اور پولیس کے خلاف برسرپیکار ہونے کی کوشش کرنے لگے ،اس درمیان پولیس نے اپنی دفاع میں اپنا بندوق نکال کر فائر کردی جس کی وجہ سے ایک وکیل زخمی ہوگئے۔اس کے بعد ماحول مزید کشیدہ ہوگیا اور وکیلوں نے احاطے میں توڑ پھوڑ کی ،اس کے علاوہ پولیس کی کئی گاڑیوں کو آگ کے حوالے بھی کردیا۔پارکنگ کو لیکر ہوئی بحث تشدد کی شکل اختیار کرلی ہے جس میں اب تک کئی وکیلوں کے زخمی ہونے کی بھی خبر آرہی ہے ۔پولیس نے پورے کورٹ کے احاطے میں پولیس فورسز تعینات کردی ہے اور سیکورٹی کو سخت کردی گئی ہے۔حالات کو قابو میں کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔خبر ہے کہ کچھ میڈیا اہلکاروں کے ساتھ بھی مارپیٹ ہوئی ہے۔

Facebook Comments