نئی دہلی:ورلڈ اردو ایسو سی ایشن کے بینر تلے ہونے والے دو روزہ بین الاقوامی سیمینار بموضوع اردو ،فارسی اور عربی میں رزمیہ شاعری :صلح وجنگ کی داستان کا آج صبح دس بجے جواہر لعل نہرو یونیورسٹی میں شاندار آغاز ہوا،دو روزہ سمینار کے افتتاحی تقریب کی نظامت خوبصوت لب ولہجہ اور انوکھی نظامت کیلئے مشہور جواہر لعل نہرو یونیورسٹی کے استاذ ڈاکٹر شفیع ایوب نے کی۔پروگرام کے آغاز میں سفیر اردو اور ورلڈ اردو ایسوسی ایشن کے چیئر مین پروفیسر خواجہ محمد اکرام الدین نے تمام مندوبین اور دیگر شرکا کا پرتباک استقبال کرتے ہوئے خوبصورت خطبہ استقبالیہ پیش کیا۔

خطبہ استقبالیہ کے بعد پروفیسر علی احمد فاطمی ،شعبہ اردو الہہ آباد یونیورسٹی نے اردو رزمیہ شادعری کےموضوع پر اپنا کلیدی خطبہ پیش کیا،افتتاحی تقریب کے مہمان خصوصی مصر سے تشریف لائے الازہر یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر یوسف عامر نے پروگرام کے حوالے سے اپنے جذبات واحساسات کا اظہار کرتے ہوئے موجودہ وقت میں اس قسم کے سیمینار کی اہمیت وضرورت پر کھل کر بات کی،دیگر مہمانان اعزازی میں جموں یونیورسٹی سے تشریف لائے پروفیسر شہاب عنایت ملک،انجمن ترقی اردو کے سکریٹری ڈاکٹر اطہر فاروقی،دبئی سے تشریف لائے بزم اردو کے جنرل سکریٹری جناب ریحان احمد خان نے اپنے اپنے تاثرات کا اظہار کیا ،دوران پروگرام بیرون ممالک سے تشریف لائے مہمانوں کو ورلڈ اردو ایسوسی ایشن کی جانب سے پروفیسر خواجہ محمد اکرام الدین کے ہاتھوں مومنٹو کی صورت میں ایک یادگار پیش کیا،ورلڈ اردو ایسوسی ایشن کی سکریٹری مہوش نور کے کلمات تشکر کے ساتھ افتتاحی تقریب کے اختتام کا اعلان ہوا۔

Facebook Comments