نئی دہلی:معیشت کی خستہ  حالی سے متعلق سوال پر مرکزی وزیر قانون روی شنکر پرساد نے آج ایک عجیب وغریب بیان دیا ہے،ممبئی میں پریس کانفرنس  کے دوران انہوں نے ہندوستانی معیشت کی بہتری کے ثبوت کیلئے دلیل کے طور پر انہوں نے فلموں کے کروڑوں کی کمائی کا حوالہ دیا ہے۔روی شنکر پرساد نے کہا کہ دو اکتوبر کو تین فلمیں ریلیز ہوئی اور تینوں فلموں نے ۱۲۰ کروڑ روپئے کی کمائی کی ہے۔روی شنکر نے کہا کہ چونکہ وہ اٹل بہاری واجپئی کے دوراقتدار میں انفارمیشن اینڈ براڈکاسٹنگ منسٹر تھے اس لئے فلموں سے ان کا لگاو ہے۔

مرکزی وزیر نے کہا کہ دو اکتوبر کو تین فلم ریلیز ہوئی تھی اور تینوں فلموں نے ایک دن میں ایک سو بیس کروڑ روپئے کی کمائی کی ہے۔انہوں نے وار،جوکر اور سائرا فلم کا نام بھی لیا  اور کہا کہ اب ملک میں معیشت مضبوط ہے جس کا نتیجہ ہے کہ ایک دن میں فلموں کو ۱۲۰ کروڑ روپئے کا ریٹرن آرہا ہے۔

اس کے ساتھ ہی انہوں نے روزگار کو لیکر این ایس ایس او کی رپورٹ کو غلط بتایا اور کہا کہ میں اس رپورٹ کو غلط کہتا ہوں ،میں نے جو اتنے اعداد وشمار رکھے ہیں  این ایس ایس او نے اسے اس میں رکھا ہے؟میں نے آپ کو دس نمبر بتائے ہیں ۔لیکن ان میں سے ایک بھی اس رپورٹ میں نہیں ہے۔انہوں نے یہ بھی کہا کہ ہم نے کبھی نہیں کہا تھا کہ سب کو سرکاری نوکری دیں گے۔

Facebook Comments